Price Action Trading Technique - Forex Market Technical Analysis

50۔ پرائس ایکشن تجارتی تکنیک

0 0 Vote
Instructor

50۔ پرائس ایکشن تجارتی تکنیک

فاریکس تربیتی پروگرام کی پچاسویں نشست

فاریکس تربیتی نشست بحوالہ مالیاتی مارکیٹس میں پھر سے خوش آمدید۔ اس نشست میں ہم پرائس ایکشن کو زیر بحث لائیں گے۔

بیشتر مالیاتی ادارے، بنکس اور پیشہ وارانہ تاجر پرائس ایکشن طریقہ کار استعمال کرتے ہیں تاکہ اپنے فارغ وتقت میں سب سے زیادہ مناسب فروختی یا خریداری انٹری پرائس کو شناخت کر سکیں۔

خریداری زون

خریداری زون نیچے جاتے رجحان کے حوالے سے ہے جہاں ایک اپ ٹرن پوائنٹ وجود میں آتا ہے اور طویل یا مختصر اوپر جاتے رجحان کو فرض کر لیا جاتا ہے۔

فروختی زون

اوپر جاتے رجحان کے حوالے سے فروختی زون وہ مقام ہوتا ہے جس میں نیچے جاتا رجحان وجود میں آتا ہے جو کہ نچلی طرف ہوتا ہے اور اس میں طویل المدت اور قلیل المدت مومینٹم ہوتا ہے۔

زیر التوا زون

زیر التوا زون وہ مقام ہوتا ہے جس میں درست خریداری اور فروختی سگنلز موجود نہیں ہوتے۔ پس تاجروں کو مناسب خریداری اور فروختی سگنلز کا انتظار کرنا ہوتا ہے بعد اس کے کہ کوئی نمایاں خبر یا واقعہ پیش آئے۔ تاجروں کو مدنظر رکھنا چاہیے کہ مناسب فروختی اور خریداری زونز ہمیشہ دستیاب نہیں ہوتے پس ایک کامیاب پیشکش کے لیے علم تجربے اور برداشت کی ضرورت ہوتی ہے۔

Price Action Trading Technique - Trading Signals and Technical Analysis of Market

پرائس ایکشن سٹریٹجی یا حکمت عملی

جب مارکیٹ کا رجحان ایسی سمت کی طرف ہوبوجوہ زائد حجم اور متفقہ آرڈرز کی بڑی تعداد کو مدنظر رکھتے ہوئے اکثر مستعد تاجر مکمل طور پر یا جزوی طور پر مخصوص مقامات کے حوالے سے اپنے آرڈرز بند کرتے ہیں جہاں مارکیٹ کا رجحان قلیل المدت یا کثیرالمدت کے لیے اپنی سمت بدلتا ہے۔ مثال کے طور پر تاجر نیچے جاتے رجحان کے حوالے سے فروختی آرڈرز رکھواتے ہیں اور کچھ گراوٹ کے بعد یوں ہوتا ہے۔ ماہرین کی اکثریت نے کوریکیٹو یا ریورس پوائنٹس سے اک ذرا پہلے اپنے فروختی آرڈرز بند کر دیے پس وہ اس مخصوص قیمت کے حوالے سے خریداری آرڈر رکھوا سکتے تھے۔ ایک مستعد تاجر ہمیشہ ریورسل پوائنٹس کا انتظار کرتا ہے تاکہ وہ مختلف شرائط برائے رجحان کے حوالے سے معقول منافع کو مدنظر رکھتے وہئے مناسب آرڈر رکھوا سکے۔

اطلاقی ٹولز

اطلاقی ٹولز جو کہ تاجروں کی طرف سے پرائس ایکشن کے حوالے سے استعمال ہوتے ہیں وہ کچھ یوں ہیں:

- لیولز معاونتی اور مزاحمتی لائنیں

- پیٹرنز یا نمونہ جات

- کینڈل سٹکس

- انڈیکیٹرز

- حکمت عملیاں جیسا کہ اینڈریوز پچ فورک

پیٹرنز کو مکمل طور پر زیر غور لایا جانا چاہیے، چونکہ ان کا پرائس ایکشن کی حکمت عملی پر کلیدی اثر ہوتا ہے۔

تاجر جو کہ نہایت اہم تجزیے کی بنیاد پر تجارت کرتے ہیں، وہ تکنیکی تجزیے کو استعمال کرتے ہیں تاکہ وہ مناسب انٹری یا کلوز پرائسز کو شناخت کر سکیں۔ بظاہر وہ تاجر کہ جن کی تجارت تکنیکی تجزیے پر مبنی ہوتی ہے، درج بالا مذکورہ ٹولز استعمال کرتے ہیں تاکہ مناسب ترین انٹری اور کلوز پرائس کی شناخت کر سکیں۔

Price Action Trading Technique - Continuation and Reversal Method - Buy and Sell Zone

وقت کے دورانیے

تاجروں کو ماہانہ فارمیٹ کے حوالے سے وقت کا دورانیہ طے کرنا چاہیے جس کو مرحلہ وار مطلوبہ ٹائم فریم کے حساب سے تبدیل کرنا چاہیے۔ ہر ٹائم سپین میں تاجر کو نمایاں لیولز معاونتی/مزاحمتی لائنوں پیٹرنز کینڈلز انڈیکیٹرز اور حکمت عملیوں کا جائزہ لینا چاہیے ۔ مثال کے طور پر اگر تاجر ایچ 1 ٹائم فریم کے حوالے سے آرڈر رکھوانے کا آرزومند ہے بعد اس کے کہ ٹائم فریم کو ایم 1 میں بدلا جائے۔ پھر اسے مرحلہ وار وقت کے دورانیے کو ایچ 1 کی طرف کم کرنا چاہیے اور اس کے ساتھ ساتھ مطلوبہ مقام پر بڑے ٹولز کو استعمال کرنا چاہیے۔ ایچ 4 وہ سب سے زیادہ قابل اطلاق ٹائم فریم ہے جو کہ پیشہ ور تاجر استعمال کیا کرتے ہیں۔

Price Action Trading Technique - Levels and Candlesticks - Indicator and Oscillator- Andrew\\'s Pitchfork

پرائس ایکشن کے فوائد

ایسی بہت سے وجوہات ہیں کہ جن کے باعث تاجر کو پرائس ایکشن کو استعمال کرنا چاہیے۔

1۔ اکثر تاجر پیٹرن سگنل کی بنیاد پر آرڈر رکھواتے ہیں۔ بعض اوقات پیٹرن جزوی طور پر وجود میں آتا ہے اور نادرست مقامات یا پیشگوئی کے بغیر رجحانات کے باعث غلط یا ناقابل اعتبار سگنلز پیدا کرتا ہے۔ تاجر پرائس ایکشن سے مستفید ہو کر مارکیٹ کے رجحان اور پیٹرنز کا تجزیہ کر کے مستقبل میں مارکیٹ ٹرینڈ کی پیشگوئی کر سکتا ہے۔ مثلاً تاجر یہ اندازہ لگا سکتا ہے کہ رجحان ٹی پی پرائس سے کشید کیا جا سکتا ہے جو کہ کسی مخصوص پیٹرن یا رجحان سے نمودار ہوئی ہو۔ یوں یہ سمت کو پلٹا دے گی جیسے ہی یہ ٹی پی پرائس کی طرف 40٪ راستہ طے کرے گی۔

2۔ تاجر معقول منافع کے حصول کے لیے ٹی پی پرائس کے مقام کا صحیح اور درست اندازہ لگا سکتا ہے۔

3۔ تاجر ایس ایل پرائس کے صحیح مقام کو جان سکتا ہے۔ اگر تاجر چوڑے ایس ایل کو شناخت کر لیتا ہے توجان لینا چاہیے کہ یہ تمام سرمائے کو نگل سکتا ہے۔ اگر مختصر ایس ایل کو منتخب کر لیا جاتا ہے تو قیمت اپنی سمت مطلوبہ ٹی پی پرائس کی طرف پھیر لیتی ہے بعد اس کے کہ جب یہ ایس ایس پرائس کو چھوتی ہے پس آرڈر خسارے کے ساتھ بند ہوتا ہے۔ ایس ایل پرائس کو نہایت درستگی سے شناخت کیا جا سکتا ہے۔

4۔ تاجر اطلاقی حکمت عملی کے حوالے سے استعداد کو بہتر بنا سکتا ہے اگر کسی رجحان کے ابتدائی اور آخری پوائنٹ کی مکمل طور پر پیشگوئی کی جا سکے۔

5۔ تاجر پرائس ایکشن کا نفاذ کر کے رسک اورمنی منیجمنٹ کو بڑھا سکتے ہیں۔ چونکہ تاجر بروکرز کی طرف سے فراہم کردہ لیوریج سے مستفید ہو سکتے ہیں۔ وہ مزید آرڈرز کو زیادہ خطرے کے ساتھ رکھتے ہیں تاکہ زیادہ زیادہ بڑا منافع حاصل کیا جا سکے۔ تاہم آرڈرز کا نامناسب مقام اور وقت سرمائے کے بڑے نقصان کا باعث بنتا ہے۔ بعض اوقات ایک تاجر قیاس کر سکتا ہے کہ کوئی رجحان از طرف ٹی پی پرائس بدل سکتا ہے۔ جب مارکیٹ پرائس ایس ایل پرائس کی طرف بٹھتی ہے تو یہ "مارجن کال" پر منتج ہوتی ہے۔

Price Action Trading Technique - Entry, Take Profit and Stop Loss Prices

6۔ تاجر کلی طور پر رجحان کی دونوں سمتوں کو زیرغور لا سکتا ہے جب وہ پرائس ایکشن استعمال کرنے کے بعد آرڈر رکھوانا چاہتا ہے۔ مثال کے طور پر بعض تاجروں نے یہ تصور کر لیاکیا کہ سونے کی قیمت 1300 پر پہنچنے کے بعد 2000 کی حد تک بڑھ جائے گی۔ تاہم انہوں نے قیمت میں مزید گراوٹ کے متعلق نہیں سوچا۔ سونے کی قیمت 900 تک گھٹ گئی اور اکثر تاجروں اپنے سرمائے سے محروم ہو گئے۔ تاجر دونوں اطراف میں بعض لیولز کو شناخت کر سکتا ہے کہ اگر پرائس مارکیٹ ان میں سے کوئی ایک لیول توڑتی ہے تو تاجر حالیہ نقل و حرکت سے متعلق نئے آرڈرز کو زیر غور لا سکتا ہے۔

مناسب ترین وقت

ہر ہفتے اور ہر اتوار کا وقت کھلے آرڈرزاور مناسب مقامات کا تجزیہ حاصل کرنے کے لیے بہترین وقت ہوتا ہے تاکہ نئے آرڈرز رکھوایا جا سکے۔ اگر مختصر دورانیہ وقت کے حوالے سے تاجر آرڈر رکھوانا چاہتا ہے یا تیزی اور سرعت سے قیمتوں کی نقل و حرکت واقع ہوتی ہے تب تاجر کو لندن سیشن کے شروعاتی وقت سے پہلے اپنی معلومات کو اپ ڈیٹ کرنا ضروری ہے۔

Price Action Trading Technique - Risk and Money Capital Management to avoid Margin Call

وائیڈ سپریڈ سمبلز

تاجر کو مناسب ترین اور برتر جوڑوں اور کموڈٹیز کا انتخاب کرنا چاہیے جیسا کہ

- ای یو آر یو ایس ڈی

- جی بی پی یو ایس ڈی

- گولڈ

- آئل

تاجر کو تجزیے میں غیر مقبول علامات کے استعمال سے پرہیز کرنا چاہیے جیسا کہ علامات جن میں سی ایچ ایف ٹی آر ایل شامل ہیں۔ مارکیٹ کے رجحان اور پرائس پر مالیاتی ٹیکس، امپورٹننگ اور ایکسپورٹننگ ریگولیشنز کے نمایاں اثرات مرتب ہوتے ہیں۔ پس بنیادی معاملے کا مارکیٹ کے رجحان پر تکنیکی موضوعات کی بہ نسبت نمایاں اثر مرتب ہوتا ہے۔ پس کم اہم علامات کا مارکیٹ کے رجحان پر نہایت کم یا نہ ہونے کے برابر اثر ہوتا ہے۔

مناسب پلیٹ فارم

ایف ایکس پرو نہایت قابل اطمینان پلیٹ فارم فراہم کرتا ہے جو کہ بہتر پلیٹ فارم ہے جس کی مختصر پرائس نائز ہے اور ہر علامت کی دستیاب تاریخ ہوتی ہے۔ پس تاجروں کی رسائی کسی مخصوص علامت کی تاریخ تک ہوتی ہے جو کہ پرائس ایکشن کی بنیاد پر تجزیے کے لیے ضروری ہے۔ مثال کے طور پر ایف ایکس پرو ایم ٹی 4 پلیٹ فارم پرچارٹ آئل علامت 2002 اور مابعد کی تاریخ دکھاتی ہے۔ پس تاجر مختلف دورانیہ ہائے وقت کے حوالے سے مارکیٹ کے رجحان کا جائزہ لے سکتا ہے۔ یہ پرزور سفارش کی جاتی ہے کہ تاجر کے پاس 2 پلیٹ فارم موجودہ وقت میں موجود ہوں۔ ایک کا استعمال مارکیٹ کے رجحان کے جائزے اور دوسرے کا آرڈر رکھوانے کے لیے ہوتا ہے۔ تاجر مزید عقلی بنیاد پر تجزیہ کر سکتا ہے جب وہ اپنے اوپن آرڈرز سے توجہ نہیں ہٹاتا ہے۔ تاجر کو ہمیشہ مارکیٹ کے رجحان کو دیکھنا ہوتا ہے اور سب سے زیادہ حالیہ رجحانات کا جائزہ لینا ہوتا ہے۔ تاہم اس کا یہ مطلب نہیں ہوتا ہے کہ مارکیٹ میں ہر اتار چڑھاؤ یا نقل و حرکت کے باعث وہ آرڈر بند یا کلوز کرتا چلا جائے۔ اکثر اوقات ٹی پی پرائس کچھ اتار چڑھاؤ کے بعد سامنے آتی ہے۔

پوائنٹ کی اہمیت

پرائس ایکشن انالسس کے لیے مستعمل قیمت کی اہمیت کے 3 مختلف لیول ہوتے ہیں، لو نارمل اور ہائی۔ یہ اہمیت مختلف عناصر کے لیے ذریعے واضح کی جا سکتی ہے۔

1۔ دورانیہ وقت: ایم 5 اور ایم 14 پر تجزیہ شدہ پرائس کی اہمیت کم ہوتی ہے جب کہ ہفتہ وار اور ماہانہ دورانہ ہائے وقت میں پرائس کی اہمہیت پرائس ایکشن تجزیے کے حوالے سے زیادہ اہمیت رکھتی ہے۔

Price Action Trading Technique - Trading Platform MetaTrader 4 Price Chart - Bullish and Bearish Trend

2۔ تصدیق:دیکھا جائے تو کئی متفقہ سگنلز ہوتے ہیں جو کہ چند پیٹرنز یا کینڈل کی مدد سے وجود میں آتے ہیں۔ پس ایس قیمت کی کی پرائس ایکشن انالسس میں زیادہ اہمیت ہوتی ہے۔ اگر اس قیمت کے حوالے سے ایک تصدیقی عمل ہو تو اس پرائس یا قیمت کا اہمیتی درجہ نارمل کی ذیل میں رہ سکتا ہے۔

3۔ اوورلیپنگ:اگر پرائس ٹرینڈ اور اس کی سمت کو مختلف دورانیہ ہائے وقت کے حوالے سے دیگر ٹولز کی مدد سے کنفرم کیا جائے تو اس پرائس کا اہمیتی درجہ بڑھ جائے گا۔

اس کے ساتھ ہی یہ نشست اختتام کو پہنچی۔ اگلی نشست کے ساتھ پھر حاضر ہوں گے، اپنا خیال رکھیے گا۔

Comments

Copyright © 2011-2020 PFOREX.COM | Professional Forex School | Cashback and Rebates