Different Types of Option Contracts - Short or Long Term

69۔ بائنری آپشن معاہدہ جات کی مختلف اقسام

0 0 Vote
Instructor

69۔ بائنری آپشن معاہدہ جات کی مختلف اقسام

فاریکس تربیتی پروگرام کی انہترویں نشست

فاریکس تربیتی نشست بحوالہ مالیاتی مارکیٹس میں پھر سے خوش آمدید۔ اس نشست میں ہم بائنری آپشن ٹریڈز کی مختلف اقسام کو زیربحث لائیں گے۔ اگرچہ ہماری بحث کا مرکزی محور بائنری آپشن کے گرد ہو گا تاہم آپشن کے متعلق بھی تفصیل سے بحث کریں گے۔

بائنری اقسام

بائنری آپشن کی دو اقسام ہیں:یورپی اور امریکی۔

یورپی آپشن

اس آپشن میں تاجروں کو معاہدے کی حد معیاد کے خاتمے تک انتظار کرنا پڑتا ہے۔ معاہدے کو صرف تب تک نافذ کیا جا سکتا ہےجب کہ حد معیاد کے خاتمے کا وقت آن پہنچے۔

امریکی آپشن

یہ نہایت عام قسم کا اور کثرت سے استعمال ہونے والا آپشن ہے کہ جس کا معاہدے کی شروعاتی تاریخ اور حد معیاد کے خاتمے کی درمیان اطلاق کیا جا سکتا ہے۔

بائنری آپشن کی اقسام

بائنری آپشن کے فراہم کنندگان اپنے کلائنٹس کی طلب کی بنیاد پر بائنری آپشن کی کئی اقسام کی نمائندگی کرتے ہیں۔ یہ بات اظہر من الشمس ہے کہ سادہ ترین اقسام ہی وہ طریقہ ہار کار ہیں کہ جن میں سب سے زیادہ تجارت ہوتی ہے۔

Different Types of Binary Option Contracts - American and European Types - Call and Put

مختلف خصائص کی بنیاد پر بائنری آپشنز کو تقسیم کیا جاتا ہے۔

ایک کیٹیگری ٹریڈنگ کی قسم کے نفع/ نقصان کے ریٹ پر بنیاد رکھتی ہے۔ نتیجتاً زائد نقصان یا خطرے کا شکار قسم میں نفع کی شرح ناگزیر طور پر زیادہ ہوتی ہے۔ زیادہ معروف اور سادہ ترین میں منافع کی شرح پریمیم کے 40٪ اور 80٪ کے مابین رہتی ہے جب کہ ان میں زیادہ پیچیدہ میں منافع پریمیم کے 500٪ فیصد سے زائد ہو سکتا ہے۔ آپ معاہدے کے حوالے سے سٹرائک پرائس کی جس قدر زیادہ قیمت منتخب کریں گے اسی قدر منافع کی رقم زیادہ ہو گی۔ اگر آپ سیڑھی یا لیڈر قسم کی تجارت کا انتخاب کریں گے تو سٹرائک پرائس کی فاصلے کی قیمت قریبی لیول کے مقابلے میں زیادہ منافع بخش ہے۔

سب سے زیادہ عام کیٹیگری کہ جس میں بائنری آپشنز کو ترتیب سے رکھا جا سکتا ہے اس کی بنیاد بوقت معاہدہ سٹرائک پرائس کی نقل و حرکت ہے۔

اپ/ڈاؤن کلاسک ہائی/لو کال/پُٹ

جس کو سب سے زیادہ آسان اور پھلنے پھولنے والی ٹریڈنگ قسم سمجھا جاتا ہے کہ جس کے ذریعے تاجر موجودہ قیمت سے قیمت کی نقل و حرکت کی سمت کی پیش گوئی کرتے ہیں۔ اگر کال کو خرید لیا جائے تو پرائس کو حد معیاد کے خاتمے کے وقت موجودہ قیمت سے اوپر جانا چاہیے تاکہ منافع حاصل ہو اس قسم میں پے آؤٹ 40٪ اور 90٪ کے مابین ہوتا ہے۔ سٹرائیک پرائس اور موجودہ پرائس میں فرق مع غیر یقینی صورت حال کے باعث پے آؤٹ میں اضافہ ہو جائے گا۔

Different Types of Binary Option Contracts - Risk and Payouts - Profit, Strike Price and Premium

ہائیر/لوئر/اوپر/نیچے

کال/پُٹ کی نسبت اپنے پیچیدہ کیس کی وجہ سے یوں ہوتا ہے۔ اس قسم کی ٹریڈنگ میں پے آؤٹ عام طور پر پریمیم کے 100٪ سے زائد ہوتا ہے جو کہ 1200٪ تک بڑھ سکتا ہے۔ اس قسم میں تاجر کو سٹرائیک پرائس (ہدفی قیمت)کا تعین کرنا پڑتا ہے۔ اگر قیمت حدمعیاد تک برقرار رہتی ہے یا سٹرائیک پرائس کو پار کر لیتی ہے تو قیمت معلوم کی جا سکتی ہے۔ مثال کے طور پر ایک تاجر یہ اندازہ لگا تا ہے کہ 1 دن حدمعیاد کے حوالے سے سٹرائیک پرائس موجودہ قیمت کی نسبت سے 25 پپس زائد ہے۔ اگر حدمعیاد کے خاتمے پر قیمت رکی رہتی ہے یا ہدفی قیمت کو پار کر لیتی ہے تو تاجر گویا اپنے معاہدے کے حساب سے کامیاب ہو گیا۔

رینج چینل ٹنل باؤنڈوری لیول

مختلف ناموں کے باوجود تجارت کا تصور پھر بھی ایک سا رہتا ہے۔ تاجروں کو اس ریجن کا تعین کرنا پڑتا ہے کہ جس میں قیمت اندرون یا بیرون اتار چڑھاؤ کا شکار رہتی ہے۔ یہ قسم دو اقسام میں رکھی جاتی ہے: ایک اندرونی رینج (ان-رینج) اور ایک بیرونی رینج (آؤٹ- رینج)۔

Different Types of Binary Option Contracts - Above and Below, Higher and Lower, Up and Down

ان-رینج

اس بات کو مدنظر رکھا جائے کہ کسی اثاثے کی حرکت مونوٹانک ہوتی ہے تو اس بنا پر تاجر یہ قیاس کر سکتا ہے کہ ایک ہفتے کی حد میعاد پر مشتمل معاہدہ فائدہ مند رہے گا۔ وہ ایریا کہ جس میں موجودہ قیمت سے ہائیر اور لوئیر ایج پرائس کی نسبت موجود ہو اس کی تخصیص ہونا ضروری ہے۔ اگر حد میعاد کے خاتمے کے وقت قیمت متعین ایریا کی حدود کو پار نہیں کرتی ہے تو تاجر منافع پاتا ہے وگرنہ دوسری صورت میں وہ پریمیم اور پیشکش سے محروم ہو جائیں گے۔ جب کہ بعض بائنری آپشن فراہم کنندگان تاجروں کو اجازت دیتے ہیں کہ وہ ریجن کے حوالے سے ہائی اور لو حدود کو منتخب کریں۔ دیگر پہلے سے ایریا کے متعین ایچ کی نمائندگی کرتے ہیں کہ جس کے حوالے سے قیمت کو نقل و حرکت کرنا ہوتی ہے۔ وہ ایریا کہ جس کی سرحدیں کم فاصلے پر ہوں زائد تعداد میں پے آؤٹ پر منتج ہوتا ہے یعنی کہ 10٪ سے لے 600٪ تک بھی ممکن ہے۔

Different Types of Binary Option Contracts - Target Price at Expiration Expiry Date - In Range Type

آؤٹ-رینج

ان-رینج قسم سے ہٹ کر پرائس کو مخصوص ایریا کی حد کو پار کرنا ہوتا ہے اور حدمعیاد کے خاتمے کے وقت اسے رئجن سے باہر رہنا پڑتا ہے۔ زیادہ تیزی سے غائب ہو جانے والے اثاثہ جات کے لیے یہ قسم منافع بخش ہے جب کہ بوقت معاہدہ ایک اثرپذیر واقعہ یا اعلان سامنے آیا ہو۔ اس قسم میں پے پے آؤٹ 50٪ سے 700٪ کے مابین رہے گا جس کی بنیاد قیمتوں کے کنارے کے مابین فاصلہ ہو گا۔ مزید یہ کہ معاہدے کے دوران کلیدی متعلقہ میٹنگ سے برآمدہ نتائج بھی اہم عوامل ہیں۔

Different Types of Binary Option Contracts - Pair and No Touch - Ladder Payouts and Premium

سیڑھی یا لیڈر

لیڈر اقسام میں سے سب سے زیادہ حالیہ قسم ہے جس کو فراہم کنندگان جیسا کہ آئی جی مارکیٹس اور جی آپشنز کے ذریعے نمائندگی ملتی ہے۔ سٹرائیک پرائسز (ہدفی قیمتیں) مع مختلف درجات اور مختلف النوع رقوم کو پہلے سے متعین نرخوں کے ذریعے نمائندگی ملتی ہے وگرنہ دوسری صورت میں تاجر درجات یعنی لیولز اور نرخ یعنی ریٹ مخصوص کر سکتے ہیں۔ بلا شک و شبہ قریبی نرخ کا دور واقع درجات کی نسبت کم پے آؤٹ ہوا کرتا ہے۔ معاہدے سے مخصوص منافع کشید کرنے کے لیے پرائس کو حد معیاد کے خاتمے کے وقت موجود لیول کو پار کرنا ہوتا ہے یا اسے پیچھے چھوڑنا ہوتا ہے۔ یہ کسی اثاثے کے مزاحمتی اور معاونتی درجات یا لیولز سے مماثل ہو سکتا ہے تاہم حد معیاد کے خاتمے کے وقت کو بھی مدنظر رکھنا ہوتا ہے۔ مدار سے متعلقہ پوائنٹس فائدہ مند ہوتے ہیں۔ جب تاجر سے کہا جائے کہ وہ اس سے متعلق معاہدے سے ڈیل کرے پے آؤٹ 60٪ سے 400٪ تک ہو گا جو کہ لیول ویلیو مع حد معیاد کے خاتمے سے چھو رہا ہو گا۔

ٹچ

اس قسم کے معاہدے میں ایک یا دو درجات برائے قیمت یا پرائس لیولز ہوتے ہیں جو کہ کسی پیشکش کی ناکامی یا کامیابی کا تعین کرتے ہیں۔ بعد میں آنے والی ذیلی اقسام معاہدے کی شرائط کی وضاحت کرتی ہیں کہ جن کو منافع بخش پیشکش کے حصول کے لیے پورا کیا جانا ضروری ہے۔

ون ٹچ

پرائس یا قیمت کو حد معیاد کے خاتمے سے قبل ایک بار سٹرائیک پرائس یا ہدفی قیمت تک پہنچنا ضروری تصور کیا جاتا ہے۔ اس بات سے قطع نظر کہ قیمت سٹرائیک پرائس یا ہدفی قیمت کو جتنی بار چاہے چھو جائے اس معاہدے سے منافع کشید کیا جاتا ہے۔

نو ٹچ

اگر معاہدے کی مدت کے کُل عرصے کے دوران سٹرائیک پرائس یا ہدفی قیمت سے ایک بار بھی چھو لیا جائے تو تاجر پیشکش کھو دے گا اور نتیجتاً پریمیم سے محروم ہو جائے گا۔

Different Types of Binary Option Contracts - One and No Touch - Rollover and Out-Range

ڈبل ون ٹچ

یہ بھی ون ٹچ طریقہ کار سے مماثل ہے تاہم اس میں دو سٹرائیک پرائسز یا ہدفی قیمتیں ہوتی ہیں جن میں سے ایک موجودہ قیمت سے زیادہ جب کہ دوسری کم ہوتی ہے۔ حتی کہ اگر قیمت معاہدے کے دوران کسی بھی سٹرائیک پرائس یا ہدفی قیمت کو چھو جائے تو تاجر کے لیے ٹائم ڈیل کامیاب ہو جائے گی۔

ڈبل نو ٹچ

ڈبل ون ٹچ کے برعکس معاہدے کے دوران قیمت کو ان سٹرائیک پرائسز یا ہدفی قیمتوں کو کبھی نہیں چھونا چاہیے جو کہ موجودہ قیمت سے اوپر یا نیچے ہوں حتی کہ کسی سٹرائیک لیولز کی کوئی ضرب معاہدے کے ختم ہو جانے کا باعث بن جاتی ہے۔ جب تاجر اس قسم کے معاہدے سے معاملہ کر رہا ہو تو فاریکس ٹریڈنگ سیکشن میں وضاحت سے بینا کردہ پرائس ایکشن تکنیک فائدہ مند ثابت ہو سکتی ہے۔ پے آؤٹ 30٪ سے 480٪ ہو گا جو کہ زیادہ تر سٹرائیک یا موجودہ پرائس گیپ سے متاثر ہوتا ہے۔

پیئر آپشن

بائنری آپشن سے متعلقہ تجارت میں ایک نایاب طریقہ ایسا ہے کہ جس میں تاجر کو دو آزادانہ اثاثہ جات کا تقابل کرنا ہوتا ہے اور وضاحت کرنا ہوتی ہے کہ کس میں قیمت میں زیادہ تبدیلی واقع ہو گی یا معاہدے کا مساوی وقت دیا جائے گا۔ پیئر آپشن ماڈل کا پے آؤٹ 50٪ سے 90٪ کے مابین ہوتا ہے۔

اس کے ساتھ ہی یہ نشست اختتام کو پہنچی۔ اگلی نشست کے ساتھ پھر حاضر ہوں گے، اپنا خیال رکھیے گا۔

Comments

Copyright © 2011-2020 PFOREX.COM | Professional Forex School | Cashback and Rebates